Skip to content

Duck Distribution Detail

  • Duck - Natures Way of Controlling Pests

    Pakistan is amongst top ten most populous countries of the world and more than 65% of the population lives in rural areas. Besides financial constraints the people are facing serious issues of disease outbreak because there are big reservoirs of waste water that are places of many pathogens.

    Why to reintroduce the ducks: Ducks rearing was a traditional source of protein in rural Punjab but during late 1990s the exotic breeds like Khaki Campbell being comparatively better egg producer, replaced local traditional breed. Khaki Campbell duck rearing in place of local breed proved a failure eventually because of less resistance to local environmental conditions and being docile. Present project is therefore planned to re-introduce the local breeds of ducks into native ecosystems due to the following reasons:

    1) Biological control of pests and parasites

    2) Villagers know, how to rear local ducks 

    3) Cleaning of heap filth and human and animals waste

    4) Best source of organic protein for local/ communities 

    5) Resistant to various diseases

    6) Easy to rear

    7) Livelihood support/Poverty alleviation

    The ducks will be reared / purchased by the Department of Wildlife and Ecology, Ravi Campus, University of Veterinary and Animal Sciences, Lahore and will be distributed among the inhabitant of villages in Punjab province, residing near water bodies. The financial support for the rearing/purchase and distribution of adult ducks among local communities will be provided by the Livestock & Dairy Development Department, Government of the Punjab.

     بطخ۰ کیڑے مکوڑوں کو تلف کرنے کا قدرتی طریقہ

    آبادی کے لحاظ سے پاکستان دنیا کے دس بڑے ممالک میں سے ایک ہے جس کی تقریباً 65٪سےزیادہ آبادی دیہی علاقوں میں رہائش پزیر ہے۔  مالی مشکلات کے علاوہ لوگوں کو وباء پھیلنے کے سنگین مسائل کا سامنا ہے کیونکہ بہت سے علاقوں میں گدلے پانی کے تالاب موجود ہیں جو کہ بیماریاں پھیلانے والے جراثیموں کا گڑھ ہیں۔                                                                                                         ۔                    

    بطخوں کی اہمیت

    پنجاب کے دیہی علاقوں میں بطخوں کو لخمیات کے روایتی حصول کے لیے پالا جاتا تھا۔ 1990 کی دہائی کے آخرمیں خاکی کیمپبل جیسی نسبتاًزیادہ انڈے دینے والی غیر ملکی نسل کی بطخ نے مقامی نسل کی بطخوں کی جگہ لے لی۔ مقامی نسل کی جگہ پالی جانے والی خاکی کیمبل بطخ  بالآخر ایک ناکامی ثابت ہوئی کیونکہ یہ ہمارے مقامی ماحول کی شدت کو برداشت نہ کر سکی۔ موجودہ منصوبہ مقامی نسل کی بطخوں کو اپنے اصلی ماحولیاتی نظام میں متعارف کرانے کے لیے بنایا گیا ہے۔                                    ۔       

    اس کی بنیادی وجوہات یہ ہیں۔

     کیڑے مکوڑوں اورطفیلیوں کا حیاتیاتی کنٹرول -

     بمقامی بطخوں کو پالنے کا طریقہ -

      گندگی کے ڈھیر، انسانوں اورجانوروں کے فضلے کی صفائی -

      لوگوں کے لئے نامیاتی پروٹین کا بہترین ذریعہ -

      مختلف بیماریوں کے خلاف مزاحمت -

      اس کو پالنا آسان ہے۔ -

      ذریعہ معاش کا حصول/ تخفیف غربت -

    بطخیں ویٹرنری یونیورسٹی اینڈ اینیمل سائنسزلاہور کے وائلڈ لائف اور ایکولوجی ڈیپارٹمنٹ راوی کیمپس سے خریدی جائیں گی اور ان کو صوبہ پنجاب کے ان دیہاتی باشندوں میں تقسیم کیا جائےگا جوپانی کے قریب رہائش پزیرہیں۔                                                                                                        ۔                                                                                

    بطخوں کو پالنے، خریدنے اورمقامی کمیونیٹیزمیں تقسیم کرنے کے لئے محکمہ لائیوسٹاک اینڈ ڈیری ڈویلپمنٹ ڈیپارٹمنٹ، پنجاب حکومت کی جانب سےمالی امداد فراہم کی جائے گی۔                              ۔                         

Duck Distribution Gallery